کنجوس کی مہمان نوازی

ایک کنجوس کی حکایت ہے کہ۔۔
اس کے گھر کوئی مہمان وارد ہوا..?

اس کنجوس نے اپنے بیٹے سے کہا کہ آدھا کلو عمدہ گوشت لیتے آؤ۔ بیٹا باہر گیا اور کافی دیر بعد خالی ہاتھ لوٹا…
??

باپ نے پوچھا گوشت کہاں ھے ؟

بیٹا: میں قصائی کے پاس گیا اور کہا کہ جو سب سے عمدہ گوشت ہے تمھارے پاس وہ دیدو۔

قصائی نے کہا میں تمہیں ایسا گوشت دوں گا گویا کہ مکھن هو.. ??

تو میں نے سوچا اگر ایسا ہی ہے تو مکھن ہی لے لوں۔

تو میں بقال کے پاس گیا اور کہا جو سب سے عمدہ مکھن ہے تمہارے پاس وہ دیدو..
بقال نے کہا میں تمہیں ایسا مکھن دوں گا گویا کہ شھد ہو۔

تو میں نے سوچا اگر ایسا ہی ہے تو شھد ہی خرید لوں تو میں شھد والے کے پاس گیا اور کہا جو سب سے عمدہ شھد ہے تمہارے پاس وہ دے دو..
تو شہد والے نے کہا میں تمہیں ایسا شھد دوں گا گویا کہ بالکل صاف شفاف پانی ہو..

تو میں نے سوچا اگر یہی قصہ ہے تو پانی تو ہے ہی گھر میں موجود۔

اس لئے میں خالی ھاتھ واپس آ گیا… ???

باپ: واہ بیٹے یہ تم نے بہت شاطرانہ عقل بھڑائی لیکن ایک نقصان کر دیا۔
وہ یہ کہ ایک دکان سے دوسری دکان جانے میں تمہاری چپل گِھس گئی ہوگی.. ??

بیٹا: نہیں ابا ایسا نہیں ہے میں مہمان کی چپل پہن کے گیا تھا۔???

Show More

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close